095- Tell me your dreams by Sidney Sheldon

Tell me your dreams by Sidney Sheldon

Tell me your dreamsمصنف: سڈنی شیلڈن

صنف: سسپنس، امریکی ادب، انگریزی ادب

صفحات: 384

سن اشاعت: 1999

سڈنی شیلڈن وہ مصنف ہیں جنہیں اپنی پہلی کتاب کی اشاعت سے ہی پسندیدگی کی سند حاصل ہو گئی تھی۔ آپ نے زیادہ تر سسپنس تھرلر ناول لکھے ہیں اور ہر ناول بیسٹ سیلر ثابت ہوا ہے۔ آپ کے پاس گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کا اعزاز بھی ہے جس کے مطابق آپ وہ مصنف ہیں جن کے ناول دنیا کی سب سے زیادہ زبانوں میں ترجمہ کئے گئے ہیں۔ اس سے یہ بھی پتا چلتا ہے کہ آپ کی شہرت صرف امریکہ یا انگریزی زبان جاننے والے قارئین تک ہی محدود نہیں رہی بلکہ دنیا کے کونے کونے تک آپ کے ناولز پہنچے ہیں۔ اردو میں بھی آپ کے ناولز موجود ہیں۔ کتابستان میں پہلے بھی آپ کی کئی کتابوں پہ بات ہوئی ہے۔ آج کا ہمارا موضوع آپ کا لکھا ہوا ایک ناول ہے جس کا عنوان ہے، “ٹیل می یور ڈریمز” یعنی مجھے اپنے خواب بتاؤ۔

ٹیل می یور ڈریمز کی تین مرکزی خواتین کردار ہیں؛ ایشلے پیٹرسن، ٹونی پریسکوٹ اور الیتے پیٹرز۔ یہ تینوں خواتین تین مختلف مزاجوں کی تھیں اور ان کی آپس میں زیادہ اچھی دوستی نہیں تھی۔ ایشلے کو ایسا محسوس ہوتا تھا کہ کوئی اس کی نگرانی کرتا تھا۔ اس نے پولیس کو اپنی حفاظت کے لئے کہا۔ اگلے دن اسے معلوم ہوا کہ جو پولیس والا رات اس کے گھر کی حفاظت پہ معمور تھا اس کا کسی نے قتل کر دیا ہے۔ اسی طرح کے دو اور قتل پہلے ہی رونما ہو چکے تھے۔ تفتیش سے معلوم ہوا کہ ان تینوں قتل کے پیچھے ایک ہی قاتل کا ہاتھ ہے اور وہ ایک عورت ہے۔ ناول کی کہانی کس طرح آگے بڑھی یہ جاننے کے لئے ناول ہی پڑھنا پڑے گا، یہاں ہم کہانی کا خلاصہ پیش کرکے قارئین کو پلاٹ کی تفصیلات نہیں دینا چاہتے کہ اس سے ناول کا مزا خراب ہوگا۔

ٹیل می یور ڈریمز ایک سائکوٹک تھرلر ہے۔ شیلڈن صاحب نے اس ناول میں بھی اپنا معیار برقرار رکھا ہے یہ کہانی ملٹی پل پرسنیلیٹی ڈس آرڈ کے ایک مریض کے بارے میں ہے۔ ملٹی پل پرسنیلیٹی ڈس آرڈر ایک ذہنی حالت یا بیماری ہے۔ اس بیماری کے مریض کے اندر اس کی اپنی شخصیت کے علاوہ کوئی اور شخصیت بھی موجود ہوتی ہے۔ کچھ معاملات میں یہ دوسری شخصیت ایک سے زیادہ بھی ہو سکتی ہیں جیسے کہ اس ناول کی کہانی میں ایک ہی کردار کے اندر تین مختلف شخصیات کی موجودگی کا بتایا گیا ہے۔ یہ شخصیات اس بیماری کے حامل شخص کی اپنی شخصیت سے بالکل مختلف ہو سکتی ہیں، یہ اپنی مرضی اور آزادی کی مالک ہوتی ہیں یہ اس بیمار شخص سے اپنی مرضی کا کوئی بھی کام کروا سکتی ہیں، اور عین ممکن ہے کہ وہ شخص اس طرح انجام دئے گئے کاموں سے قطعی ناواقف ہو۔

ٹیل می یور ڈریمز میں شیلڈن صاحب نے ملٹی پل پرسنیلیٹی ڈس آرڈر کے بارے میں اچھی آگاہی دی ہے۔ ایسے مریض کس طرح ہو سکتے ہیں اور ان کے اندر کیا معاملات چل رہے ہوتے ہیں، اس بارے میں ایک اچھی معلومات کتاب ہے جس میں کہانی کہانی میں ایک ذہنی بیماری کا بھی علم ہو جاتا ہے۔ گویا ایک ٹکٹ میں دو فائدے والی بات ہے۔ لیکن اس سے کہانی کا تھرل کسی بھی طرح متاثر نہیں ہوتا۔ شیلڈن صاحب لفظوں کے جادوگر ہیں وہ کہانی اس طرح بیان کرتے ہیں کہ قاری ناول کو مکمل پڑھے بغیر چھوڑ نہیں سکتا۔

کیا آپ اس تبصرے سے متفق ہیں۔آپ بھی اس کتاب کے بارے میں اپنی رائے دیں۔

اگر آپ نے یہ کتاب پڑھی ہے تو اسے 1 سے 5 ستاروں کے درمیان ریٹ کریں۔

تشریف آوری کے لئے مشکور ہوں۔

اگلے ہفتے کشور ناہید کی کتاب “بری عورت کی کتھا” کا تعارف و تبصرہ ملاحظہ کیجئے۔ان شاء اللہ۔

***************

 Sydney Sheldon کے قلم سے مزید

Are you afraid of dark? by Sidney Sheldon

The memories of midnight by Sidney Sheldon

دی اسٹارز شائن ڈاؤن (The Stars Shine Down) از سڈنی شیلڈن (Sidney Sheldon)

The sky is falling by Sidney Sheldon

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s